Home / News / پی ٹی آئی رہنما کے کتے کو ٹکر مارنا شہری کو مہنگا پڑ گیا

پی ٹی آئی رہنما کے کتے کو ٹکر مارنا شہری کو مہنگا پڑ گیا

سابق گورنر پنجاب غلام مصطفیٰ کے کتے کو ٹکر مارنے پر شہری کے خلاف مقدمہ درج، شہری روپوش ہو گیا

مظفر گڑھ (مظفرگڑھ ڈاٹ سٹی۔ 04 اکتوبر 019ء) : پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اور سابق گورنر پنجاب ملک غلام مصطفی کھر کا کتا حادثہ میں زخمی ہونے پر غریب کاشتکار کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔مظفر گڑھ میں سابق گورنر پنجاب غلام مصطفیٰ کجھر کے کتے کو موٹر سائیکل سوار نے ٹکر مار دی تھی۔تفصیلات کے مطابق تھانہ سنانواں کے علاقے کھر غربی میں موٹر سائیکل سوار افراد کے سامنے کتا آجانے سے حادثہ میں موٹرسائیکل سوار بھی زخمی ہوا۔
مظفرگڑھ پولیس نے حادثہ میں زخمی ہونے والے غریب کاشتکار کی کوئی کاروائی نہ کی اور بااثر سیاستدان کے کتے کے زخمی ہونے پر مقدمہ درج کر ڈالا۔ درج کیے گئے مقدمہ میں قیمتی کتے کی مالیت ایک لاکھ تیس ہزار روپے بتائی گئی ہے جس کو سیر کرانے کے دوران حادثہ پیش آیا۔

پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما ملک غلام مصطفی کھر کے ملازم عبدالرشید کھیارا کی مدعیت میں درج مقدمے میں کہا گیاہے کہ وہ ملک غلام مصطفی کھر کے کتوں کو سیر کرا رہا تھا کہ ایک شکاری کتا نسل کاٹھیا بلٹیر مالیتی ایک لاکھ 0ہزارروپے موٹر سائیکل کی ٹکر سے نیچے آگیا،جس سے اس کی کمر ٹوٹ گئی۔

اس انوکھے مقدمے پر مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ تبدیلی سرکار میں مظفرگڑھ پولیس کا انوکھا انصاف ہے، غریب انسان سے زیادہ وڈیرے کے کتے کو اہمیت دی جانے لگی ہے۔پولیس ترجمان وسیم خان گوپانگ کے مطابق وٹرنزی ڈاکٹر کی جانب سے میڈیکل رپورٹ موصول ہونے پر موٹر سائیکل سوار کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔جب کہ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ موٹر سائیکل سوار محمد اسماعیل بھی حادثے میں زخمی ہوا تھا جو مقدمے میں نامزد ہونے کے بعد روپوش ہو گیا ہے۔خیال رہے کہ غلام مصطفی کھر نے اپریل 2017ء میں پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی تھی۔انہوں نے چئیرمین پی ٹی آئی عمران خان سے ملاقات کی تھی جس کے بعد پی ٹی آئی میں شمولیت اختیار کی

Loading...