Breaking News
Home / News / مظفر گڑھ : پولیس نے چار سالہ بچے کیخلاف چوری کا مقدمہ درج کردیا

مظفر گڑھ : پولیس نے چار سالہ بچے کیخلاف چوری کا مقدمہ درج کردیا

مظفر گڑھ (مظفر گڑھ ڈاٹ سٹی۔ 20 دسمبر2017ء) مظفر گڑھ میں کوٹ ادو پولیس نے چار سالہ بچے کے خلاف چوری کا مقدمہ درج کردیا، جس میں ضمانت حاصل کرنے کے لیے رضوان کے والدین عدالت پہنچ گئے۔ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا کہ چار سالہ بچہ رضوان چوری میں ملوث ہے۔پولیس نے مقدمے میں موقف اختیار کیا کہ چار سالہ بچے رضوان نے ساتھیوں کے ہمراہ ایک ہی رات میں تین دکانوں کے تالے توڑ کر لاکھوں روپے مالیت کا سامان، جس میں چار گندم کے تھیلوں کے علاوہ دیگر اشیائے خورونوش اور آئل وغیرہ شامل تھے، چوری کر لیا۔چار سالہ ملزم رضوان والدین کے ہمراہ ضمانت کے لیے عدالت پہنچ گیا۔کسی کی سماعت کے دوران عدالت نے پولیس کی سرزنش کرتے ہوئے مدعی کو عدالت میں طلب کر لیا۔اس موقع پر رضوان کے والد کا کہنا تھا کہ میرا بیٹا ابھی ٹھیک سے بول بھی نہیں سکتا جبکہ کوٹ ادو پولیس نے مدعی سے مل کر میرے چار سالہ بچے پر جھوٹا چوری کا مقدمہ درج کرایا دیا۔خیال رہے کہ یہ پہلی مرتبہ نہیں کہ پنجاب پولیس نے کسی معصوم بچے کو مقدمے میں نامزد کیا اس سے قبل متعدد ایسے واقعات سامنے آچکے ہیں جن میں پولیس کی جانب سے معصوم بچوں کو مقدمات میں نامزد کرنے پر عدالتوں کی جانب سے برہمی کا اظہار کیا گیا۔اس سے قبل 13 جنوری کو شیخوپورہ میں پولیس نے 2 سالہ بچے پر فائرنگ کا مقدمہ درج کیا تھا۔13 فروری کو 4 سالہ بچے پر ڈکیتی کا مقدمہ قائم کیا گیا تھا۔12 اپریل کو لاہور کی عدالت نے 9 ماہ کے بچے کے خلاف مقدمہ خارج کیا تھا۔جبکہ 14 نومبر کو 6 سالہ بچے پر ریپ کا مقدمہ درج کیا گیا تھا۔۔
Loading...
%d bloggers like this: