Breaking News
Home / News / مظفرگڑھ، شوگر ملزگنا خریدنے کی پابند،گنا نہ خریدنے والی ملز کے خلاف کارروائی کی جائے گی، صوبائی مشیر زراعت

مظفرگڑھ، شوگر ملزگنا خریدنے کی پابند،گنا نہ خریدنے والی ملز کے خلاف کارروائی کی جائے گی، صوبائی مشیر زراعت

مظفرگڑھ۔ (مظفرگڑھ ڈاٹ سٹی۔ 04 جنوری2020ء) صوبائی مشیر زراعت سردار عبدالحئی خان دستی نے کہا ہے کہ گنے کے کاشتکاراپنا گنا شوگر ملوں تک پہنچائیں، شوگر ملزگنا خریدنے کی پابند ہیں، جو مل گنا خرید نہیں کرے گی اس کی خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی یہ بات انہوں نے گنے کی خریداری کے سلسلے میں شوگر ملز کے نمائندگان اور نمائندہ کاشتکاروں کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی، ڈپٹی کمشنر انجینئر امجد شعیب خان ترین اور ایم این اے رضا ربانی بھی ان کے ہمراہ تھے۔صوبائی مشیر نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارکی ہدایت پر ضلع مظفرگڑھ کے گنے کے کاشتکار وں کو ان کا جائز حق دلوانا ہماری اولین ترجیح ہے اس کیلئے کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں ہوگا۔انہوں نے کہا کہ کسان ہمارے ضلع کا سب سے مظلوم طبقہ ہیں، ان کے حق پرکسی کو ڈاکہ نہیں ڈالنے دیں گے۔ ڈپٹی کمشنر امجد شعیب خان ترین نے کہا کہ شوگر ملز انتظامیہ کسانوں کو حکومتی ریٹ 190روپے فی من ادائیگی کو بروقت یقینی بنائے، وزن میں کٹوتی کرنے والوں کے خلاف کارروائی ہوگی۔ایم این اے رضا ربانی نے کہا کہ گنے کے کاشتکاروں کا استحصال نہیں ہونے دینگے، وزن میں کٹوتی کرنے والوں اور سرکاری ریٹ پرادائیگی نہ کرنے پر شوگر ملز انتظامیہ کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر کوٹ ادو فیاض احمد، ڈپٹی ڈائریکٹر زارعت محمد یوسف الرحمن شیخ، صدر انجمن کاشتکاران میاں احسان دھنوتر، جنرل سیکرٹری مہر خالد محمود، سینئر نائب صدر محمد عثمان عاصم سمیت فاطمہ شوگر مل، شیخو شوگر مل اور رحمان حاجرہ شوگر مل کے نمائندگان اور نمائندہ کاشتکاروں نے شرکت کی۔صوبائی مشیر زراعت سردار عبدالحئی خان دستی نے کہا کہ کسان سارا سال محنت کر کے گنے کی فضل تیار کرتا ہے، اگر اسے سال بعد بھی اس کا جائز حق نہ ملے تو یہ زیادتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کاشتکاروں کے مفادات کی پاسبانی کرے گی۔ اجلاس میں فیصلہ کی گیا کہ تمام شوگر ملز کھول دی جائیں گی اورحکومتی ریٹ 190روپے فی من کے حساب سے گنا خرید کیا جائے گا، ورائٹی گنے پر کوئی کٹوتی نہیں ہوگی۔

Loading...
%d bloggers like this: